Home World US successful successfully tested hypersonic missile

US successful successfully tested hypersonic missile

امریکہ نے ہائپر سونک میزائل کا کامیاب تجربہ کیا

The United States has said that the Navy and Air Force conducted three successful tests of hypersonic missiles.

According to a Reuters report, the Pentagon said that the US Navy and US military had tested hypersonic with prototype weapons.

Progress on the new weapons will be announced, the statement said, but that three successful tests have already been conducted.

Sandia National Laboratories, a US manufacturer of hypersonic missiles, said in a statement that three rockets were designed and tested in one year.

Sandia Laboratories tested three rockets at NASA for the Department of Defense, including the Navy’s Conventional Prompt Strike and the Army’s Long-Range Hypersonic Weapons Program, and is equipped with 23 state-of-the-art technologies, the statement said.

The US laboratory said it was the first test of a hypersonic rocket for operational readiness funded by the Defense Department.

Earlier, the US expressed surprise over reports of hypersonic missile test by China. The Financial Times reported that the Chinese military launched a hypersonic rocket orbiting the globe in low orbit and fell 40 kilometers from its target.

The report, citing intelligence sources, said the tests showed China has made “amazing progress” in hypersonic weapons and is far more advanced than US officials understood.

The report said the hypersonic missile was launched by a Long March rocket and its test was kept secret.

China later denied reports of a hypersonic missile test, saying it had tested the spacecraft to test reusable technologies.

Chinese Foreign Ministry spokesman Xiao Lijian told reporters: “As far as I know, this was a test of a conventional spacecraft that tests reusable spacecraft technology.”

He said that this process would make it easier for humans to use space for peaceful humanitarian purposes.

Earlier in 2019, China displayed its advanced weapons including its hypersonic missile DF-17 in a parade.

It should be noted that hypersonic weapons are difficult to defend as they fly at low altitudes but can reach speeds of up to five times the speed of sound, or about 6,200 kmph.

Russia successfully test-fired an intercontinental hypersonic missile in early 2018.

Russian President Vladimir Putin said on the successful test of the “Avangard” hypersonic missile that “the hypersonic missile has made the defense system exceptionally strong”.

Earlier in March 2017, Russia had successfully test-fired the Kunjal hypersonic missile, which is capable of traveling at 10 times the speed of sound.

North Korea claimed to have successfully tested a new hypersonic gliding missile in September this year.

According to government media reports, the nuclear-armed and state-of-the-art missile is a new development.

Korea’s state news agency said the missile launch was of “great strategic importance” as North Korea wanted to “increase its defense capabilities” by a thousand times.

امریکہ نے کہا ہے کہ بحریہ اور فضائیہ نے ہائپرسونک میزائل کے تین کامیاب تجربات کیے۔

روئٹرز کی رپورٹ کے مطابق پینٹاگون نے کہا کہ امریکی بحریہ اور امریکی فوج نے پروٹو ٹائپ ہتھیاروں سے ہائپرسونک کا تجربہ کیا ہے۔

بیان میں کہا گیا ہے کہ نئے ہتھیاروں پر پیش رفت کا اعلان کیا جائے گا ، لیکن یہ کہ تین کامیاب ٹیسٹ پہلے ہی ہو چکے ہیں۔

ہائپرسونک میزائل بنانے والی امریکی کمپنی سینڈیا نیشنل لیبارٹریز نے ایک بیان میں کہا کہ ایک سال میں تین راکٹ ڈیزائن اور ٹیسٹ کیے گئے۔

بیان میں کہا گیا ہے کہ سینڈیا لیبارٹریز نے ناسا میں ڈیپارٹمنٹ آف ڈیفنس کے لیے تین راکٹوں کا تجربہ کیا ، جن میں نیوی کا کنونشنل پرامپٹ اسٹرائک اور آرمی کا لانگ رینج ہائپرسونک ہتھیاروں کا پروگرام شامل ہے ، اور یہ 23 جدید ترین ٹیکنالوجیز سے لیس ہے۔

امریکی لیبارٹری نے کہا کہ یہ محکمہ دفاع کے فنڈ سے چلنے والی آپریشنل تیاری کے لیے ہائپرسونک راکٹ کا پہلا ٹیسٹ تھا۔

اس سے قبل امریکہ نے چین کی جانب سے ہائپرسونک میزائل کے تجربے کی خبروں پر حیرت کا اظہار کیا تھا۔ فنانشل ٹائمز نے رپورٹ کیا ہے کہ چینی فوج نے ایک ہائپرسونک راکٹ کو کم مدار میں دنیا کے گرد چکر لگایا اور اپنے ہدف سے 40 کلومیٹر نیچے گر گیا۔

رپورٹ میں انٹیلی جنس ذرائع کا حوالہ دیتے ہوئے کہا گیا کہ ٹیسٹوں سے ظاہر ہوتا ہے کہ چین نے ہائپرسونک ہتھیاروں میں “حیرت انگیز پیش رفت” کی ہے اور امریکی حکام کے سمجھنے سے کہیں زیادہ ترقی یافتہ ہے۔

رپورٹ میں کہا گیا کہ ہائپرسونک میزائل لانگ مارچ راکٹ کے ذریعے لانچ کیا گیا اور اس کے تجربے کو خفیہ رکھا گیا۔

چین نے بعد میں ہائپرسونک میزائل کے تجربے کی خبروں کی تردید کرتے ہوئے کہا کہ اس نے خلائی جہاز کا دوبارہ استعمال کے قابل ٹیکنالوجیز کی جانچ کے لیے تجربہ کیا ہے۔

چینی وزارت خارجہ کے ترجمان ژاؤ لیجیان نے نامہ نگاروں کو بتایا: “جہاں تک میں جانتا ہوں ، یہ ایک روایتی خلائی جہاز کا امتحان تھا جو دوبارہ استعمال کے قابل خلائی جہاز ٹیکنالوجی کی جانچ کرتا ہے۔”

انہوں نے کہا کہ اس عمل سے انسانوں کے لیے جگہ کو پرامن انسانی مقاصد کے لیے استعمال کرنا آسان ہو جائے گا۔

اس سے قبل 2019 میں چین نے اپنے جدید ہتھیار اپنے ہائپرسونک میزائل ڈی ایف 17 سمیت پریڈ میں دکھائے۔

واضح رہے کہ ہائپرسونک ہتھیاروں کا دفاع کرنا مشکل ہے کیونکہ وہ کم بلندی پر اڑتے ہیں لیکن آواز کی رفتار سے پانچ گنا یا تقریبا 6 6،200 کلومیٹر فی گھنٹہ تک پہنچ سکتے ہیں۔

روس نے 2018 کے اوائل میں بین البراعظمی ہائپرسونک میزائل کا کامیاب تجربہ کیا۔

روسی صدر ولادیمیر پیوٹن نے “ایوانگارڈ” ہائپرسونک میزائل کے کامیاب تجربے پر کہا کہ “ہائپرسونک میزائل نے دفاعی نظام کو غیر معمولی مضبوط بنا دیا ہے”۔

اس سے قبل مارچ 2017 میں روس نے کنجل ہائپرسونک میزائل کا کامیاب تجربہ کیا تھا جو آواز کی رفتار سے 10 گنا زیادہ سفر کرنے کی صلاحیت رکھتا ہے۔

شمالی کوریا نے رواں سال ستمبر میں ایک نئے ہائپرسونک گلائیڈنگ میزائل کا کامیاب تجربہ کرنے کا دعویٰ کیا ہے۔

سرکاری میڈیا رپورٹس کے مطابق جوہری ہتھیاروں سے لیس اور جدید ترین میزائل ایک نئی پیش رفت ہے۔

کوریا کی سرکاری خبر رساں ایجنسی نے کہا کہ میزائل لانچ “بڑی اسٹریٹجک اہمیت” کا حامل ہے کیونکہ شمالی کوریا اپنی دفاعی صلاحیتوں کو ہزار گنا بڑھانا چاہتا ہے۔

Most Popular

Sindh Emergency Rescue 1122 Jobs 2022 PTS Application Form

Sindh Emergency Rescue Service 1122 is seeking applications from experienced and energetic candidates for Rescue 1122 Sindh Jobs 2022 against the vacant...

200 Rs Prize Bond Draw List 90 Multan Result 2022

Multan, As per the Prize Bond Schedule 2022 issued by the National Savings of Pakistan, The 90th draw of Rs 200 Prize Bond List 2022 is held...

25000 Rs Premium Prize Bond List 10 June 2022 Hyderabad

Hyderabad, 25000 Rs Premium Prize Bond Draw List 6 winners 2022 has announced at Hyderabad on 10 June, 2022, this is the 25000 Rs...

40000 Rs Premium Prize Bond List 21 10 June 2022 Muzaffarabad Winner List

Muzaffarabad, 40000 Rs Premium Prize Bond Draw winners 2022 has announced at Muzaffarabad on June 10, 2022, this is the 40000 Rs Premium Prize...

Recent Comments