US has also taken confidence in preparing for an attack on Iran: Israel

0
11118
US has also taken confidence in preparing for an attack on Iran: Israel
US has also taken confidence in preparing for an attack on Iran: Israel

ایران پر حملے کی تیاری پر امریکا کو بھی اعتماد میں لیا ہے: اسرائیل

The Israeli Defense Minister has said that he has ordered his air force to prepare for an attack on Iran and has also informed the United States about it.

According to the International News Agency, Israeli Defense Minister Benny Gantz has said that in a meeting with the US Secretary of Defense in Washington, the Israeli Air Force has informed about the readiness to attack Iran.

Speaking to reporters in Florida, Secretary of Defense Benny Gantz added that during the meeting, US officials endorsed Israel’s position and agreed that Iran was the biggest problem in the world.

Criticizing Iran, the Israeli defense minister said that no progress had been made on the global nuclear deal, which was due to Iran’s irresponsible behavior and that Iran was playing games with the United States over the nuclear deal.

A senior Israeli Defense Ministry official told foreign media on condition of anonymity that Secretary of Defense Benny Gantz also briefed his US counterpart Lloyd Austin on the “timeline” for the attack on Iran.

The day before, the Israeli defense minister had expressed anger at Iran, saying that the patience of the United States and European countries was running out and that he believed that Iran was sabotaging the nuclear talks.

It should be noted that the second round of talks between the United States and Iran for the withdrawal of the International Atomic Energy Agency is underway in Vienna.

اسرائیلی وزیر دفاع نے کہا ہے کہ انہوں نے اپنی فضائیہ کو ایران پر حملے کی تیاری کا حکم دیا ہے اور اس بارے میں امریکہ کو بھی آگاہ کر دیا ہے۔

بین الاقوامی خبر رساں ادارے کے مطابق اسرائیلی وزیر دفاع بینی گینٹز نے کہا ہے کہ واشنگٹن میں امریکی وزیر دفاع سے ملاقات میں اسرائیلی فضائیہ نے ایران پر حملے کی تیاری سے آگاہ کیا ہے۔

فلوریڈا میں صحافیوں سے بات کرتے ہوئے سیکرٹری دفاع بینی گینٹز نے مزید کہا کہ ملاقات کے دوران امریکی حکام نے اسرائیل کے موقف کی تائید کی اور اس بات پر اتفاق کیا کہ ایران دنیا کا سب سے بڑا مسئلہ ہے۔

ایران پر تنقید کرتے ہوئے اسرائیلی وزیر دفاع کا کہنا تھا کہ عالمی جوہری معاہدے پر کوئی پیش رفت نہیں ہوئی جس کی وجہ ایران کا غیر ذمہ دارانہ رویہ ہے اور ایران جوہری معاہدے پر امریکا کے ساتھ گیم کھیل رہا ہے۔

اسرائیلی وزارت دفاع کے ایک سینیئر اہلکار نے نام ظاہر نہ کرنے کی شرط پر غیر ملکی میڈیا کو بتایا کہ سیکریٹری دفاع بینی گینٹز نے اپنے امریکی ہم منصب لائیڈ آسٹن کو بھی ایران پر حملے کی ’ٹائم لائن‘ پر بریف کیا۔

گزشتہ روز اسرائیلی وزیر دفاع نے ایران پر برہمی کا اظہار کرتے ہوئے کہا تھا کہ امریکہ اور یورپی ممالک کے صبر کا پیمانہ لبریز ہو رہا ہے اور ان کا خیال ہے کہ ایران جوہری مذاکرات کو سبوتاژ کر رہا ہے۔

واضح رہے کہ امریکہ اور ایران کے درمیان بین الاقوامی ایٹمی توانائی ایجنسی سے انخلا کے لیے مذاکرات کا دوسرا دور ویانا میں جاری ہے۔