SBP fined a collective Rs1.68b to15 Pakistani banks

0
584
Pakistanis will be able to open bank accounts through digital channels: SBP
Pakistanis will be able to open bank accounts through digital channels: SBP

اسٹیٹ بینک نے 15 پاکستانی بینکوں کو مجموعی طور پر 1.68 ارب روپے جرمانہ کیا

اسٹیٹ بینک آف پاکستان نے 15 کمرشل بینکوں پر بھاری جرمانے عائد کردیئے ہیں۔

ان کے جرائم میں صارفین کا ڈیٹا ریکارڈ نہ کرنا اور زرمبادلہ کے قوانین کی خلاف ورزی کرنے کے ساتھ ساتھ منی لانڈرنگ اور دہشت گردی سے متعلق فنانسنگ قوانین کی خلاف ورزی بھی شامل ہے۔

اجتماعی جرمانے کی رقم 1 ارب 18 کروڑ روپے ہے اور مارچ سے جون تک نافذ کی گئی ہے۔

اسٹیٹ بینک نے بینکوں کی فہرست بھی جاری کردی ہے۔ وہ یو بی ایل ، جے ایس بینک ، میزان بینک ، فیسل بینک ، دی بینک آف پنجاب ، ایچ بی ایل ، ایم سی بی ، نیشنل بینک آف پاکستان ، بینک الہبیب ، حبیب میٹروپولیٹن بینک ، بینک الفلاح ، عسکری بینک ، بینک اسلامی ، پنجاب صوبائی کوآپریٹو بینک اور زرائ ہیں۔ تاراقیاتی بینک۔

بیشتر بینکوں نے صارفین کی مستعدی قواعد کی خلاف ورزی کی جبکہ پنجاب صوبائی کوآپریٹو بینک اور زرائ تراکیتی بینک نے منی لانڈرنگ اور دہشت گردی سے متعلق مالی اعانت کے قوانین کے تحت خلاف ورزی کی۔

The State Bank of Pakistan has fined 15 commercial banks.

Her crimes include the failure to collect customer information, the violation of foreign exchange laws, and the violation of anti-money laundering and terrorist financing laws.

The collective fine amounts to 1.68 billion rupees and was imposed from March to June.

play video

The State Bank has also published a list of banks. They are UBL, JS Bank, Meezan Bank, Faysal Bank, Bank of Punjab, HBL, MCB, National Bank of Pakistan, Bank AlHabib, Habib Metropolitan Bank, Bank Alfalah, Askari Bank, Bank Islami, Punjab Provincial Cooperative Bank and Zarai Taraqiati Bank.

Most banks violated customer due diligence, while Punjab Provincial Cooperative Bank and Zarai Taraqiati Bank violated anti-money laundering and terrorist financing regulations.