Home World US refuses to give "special response" to Pakistan-TTP talks

US refuses to give “special response” to Pakistan-TTP talks

امریکہ نے پاکستان-ٹی ٹی پی مذاکرات پر ’’خصوصی ردعمل‘‘ دینے سے انکار کردیا

The United States has refused to comment on Islamabad’s decision to start talks with the banned Tehreek-e-Taliban Pakistan (TTP), saying the two countries still have a “line of interest” on Afghanistan.

According to US media reports pointed out that on Monday Pakistan and the TTP agreed on a “complete ceasefire” after talks to end years of militancy in the country.

US media also reported that Afghanistan’s acting foreign minister Amir Khan Mottaki arrived in Islamabad on Wednesday on a three-day visit, the first by an Afghan minister to Pakistan since the Taliban took control of Kabul on August 15.

The issue was also raised at a briefing at the State Department, where a journalist reminded spokesman Ned Price that Washington still considers the TTP a terrorist organization and called for an official US response to the talks.

“If we have any particular reaction to Pakistan’s negotiations with the Pakistani Taliban, we will definitely let you know,” Ned Price said.

“We are in regular contact with the Pakistani leadership regarding Afghanistan,” he said.

He said the US government had discussed the issue with Pakistani officials in the past.

The spokesman said: “We have heard from our Pakistani counterparts, both publicly and privately, that they too have an interest in benefiting Afghanistan’s minorities, including its women and girls, over the past 20 years. Should not be wasted.

“Thus, when it comes to Afghanistan, our interests are very much in common and we are continuing these talks,” he said.

Ned Price also said that the new Special Representative for Afghanistan, Tom West, would soon visit Islamabad to “continue the talks in the coming days.”

امریکہ نے کالعدم تحریک طالبان پاکستان (ٹی ٹی پی) کے ساتھ بات چیت شروع کرنے کے اسلام آباد کے فیصلے پر تبصرہ کرنے سے انکار کرتے ہوئے کہا ہے کہ دونوں ممالک کے درمیان اب بھی افغانستان پر ’مفاد کی لکیر‘ ہے۔

امریکی میڈیا رپورٹس کے مطابق پیر کو پاکستان اور ٹی ٹی پی نے ملک میں برسوں سے جاری عسکریت پسندی کے خاتمے کے لیے بات چیت کے بعد ’مکمل جنگ بندی‘ پر اتفاق کیا۔

امریکی میڈیا نے یہ بھی اطلاع دی ہے کہ افغانستان کے قائم مقام وزیر خارجہ امیر خان متقی تین روزہ دورے پر بدھ کو اسلام آباد پہنچے ہیں، جو 15 اگست کو طالبان کے کابل پر قبضے کے بعد کسی افغان وزیر کا پاکستان کا پہلا دورہ ہے۔

یہ معاملہ اسٹیٹ ڈپارٹمنٹ کی ایک بریفنگ میں بھی اٹھایا گیا، جہاں ایک صحافی نے ترجمان نیڈ پرائس کو یاد دلایا کہ واشنگٹن اب بھی ٹی ٹی پی کو ایک دہشت گرد تنظیم سمجھتا ہے اور اس نے مذاکرات کے لیے امریکہ سے باضابطہ ردعمل کا مطالبہ کیا۔

نیڈ پرائس نے کہا، “اگر پاکستانی طالبان کے ساتھ پاکستان کے مذاکرات پر ہمارے پاس کوئی خاص ردعمل ہے، تو ہم آپ کو ضرور بتائیں گے۔”

انہوں نے کہا کہ ہم افغانستان کے حوالے سے پاکستانی قیادت سے مسلسل رابطے میں ہیں۔

انہوں نے کہا کہ امریکی حکومت نے ماضی میں پاکستانی حکام سے اس معاملے پر بات کی تھی۔

ترجمان نے کہا: “ہم نے اپنے پاکستانی ہم منصبوں سے، عوامی اور نجی طور پر، سنا ہے کہ وہ بھی گزشتہ 20 سالوں میں افغانستان کی اقلیتوں، بشمول اس کی خواتین اور لڑکیوں، کو فائدہ پہنچانے میں دلچسپی رکھتے ہیں۔ اسے ضائع نہیں کیا جانا چاہیے۔

انہوں نے کہا، “اس طرح، جب افغانستان کی بات آتی ہے، تو ہمارے مفادات بہت مشترک ہیں اور ہم ان مذاکرات کو جاری رکھے ہوئے ہیں۔”

نیڈ پرائس نے یہ بھی کہا کہ افغانستان کے لیے نئے خصوصی نمائندے ٹام ویسٹ جلد ہی اسلام آباد کا دورہ کریں گے تاکہ “آنے والے دنوں میں بات چیت کو جاری رکھا جا سکے۔”

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here

Most Popular

Alia Bhatt made her fan cry

عالیہ بھٹ نے اپنے مداح کو رلا دیا Bollywood star Alia Bhatt recognized her fan even after 7...

Most watched match of Pak-India World Cup T20

پاک بھارت ورلڈ کپ ٹی20 کا سب سے زیادہ دیکھا جانے والا میچ The International Cricket Council (ICC)...

Taliban-U.S talks will resume in in Doha, Qatar

قطر کے دارالحکومت دوحہ میں طالبان امریکہ مذاکرات دوبارہ شروع ہوں گے Zabihullah Mujahid, a spokesman for the...

Dollar reached a record high of Rs 179

ڈالر 179 روپے کی بلند ترین سطح پر پہنچ گیا The dollar continued to soar, reaching a high...

Recent Comments