Home World Dr. Ruth Pfaffo's third anniversary was celebrated across Pakistan on Monday

Dr. Ruth Pfaffo’s third anniversary was celebrated across Pakistan on Monday

ڈاکٹر روتھ پفاؤ کی تیسری برسی پیر کے روز پاکستان بھر میں منائی گئی

پاکستان میں جذام کے خاتمے کے لئے اپنی زندگی کے 55 سال سے زیادہ کے لئے وقف کرنے والے جرمن ڈاکٹر ، ڈاکٹر روتھ پفاؤ کی تیسری برسی پیر کے روز ملک بھر میں منائی گئی۔

پاکستان کے مدر ٹریسا کی حیثیت سے پائے جانے والے ، ڈاکٹر پفاؤ 1929 میں جرمنی کے لیپزگ میں پیدا ہوئے تھے۔ میڈیسن کی طالبہ ، اسے 1960 میں اس کے حکم ، ڈاٹرز آف دی ہارٹ آف مریم کے ذریعہ ہندوستان بھیجا گیا تھا ، لیکن ویزا کے معاملات کی وجہ سے وہ کراچی میں پھنس گئیں۔ اسی دوران وہ پہلے جذام کے بارے میں آگاہ ہوگئیں۔

بعد ازاں 1961 میں ، ڈاکٹر پفاؤ صرف پاکستان واپس آنے کے لئے ہندوستان گئے ، جہاں اس نے جذام ، ایک چھوٹا سا متعدی جراثیم سے متعلق انفیکشن پر قابو پانے کی مہم شروع کی۔ تمام الیکٹرانک چینلز کے مطابق ، اس نے پاکستانی ڈاکٹروں کو تربیت دی اور ملک بھر میں جذام کلینکس کی تعمیر ، غیر ملکی عطیات کی طرف راغب کیا۔

ڈاکٹر پفاؤ نے میری ایڈیلیڈ لیپروسی سنٹر (ایم اے ایل سی) میں شمولیت اختیار کی اور جلد ہی اسے 157 طبی مراکز کے نیٹ ورک کے مرکز میں تبدیل کردیا جس نے کوڑوں کے مرض میں مبتلا دسیوں ہزاروں پاکستانیوں کا علاج کیا۔

ورلڈ ہیلتھ آرگنائزیشن (ڈبلیو ایچ او) نے اس بیماری کو ، جو ہنسن کی بیماری بھی کہا جاتا ہے ، کو 1996 میں ایشیاء کی دیگر ممالک کے مقابلے میں ، پاکستان میں قابو پانے کا اعلان کیا۔
انہیں 1988 میں پاکستان کی شہریت دی گئی تھی اور ان کی خدمات کے لئے انھیں بے حد سراہا گیا تھا ، ان میں ہلال امتیاز ، دوسرا اعلی شہری اعزاز ، نشانِ قائد اعظم ، اور ہلالِ پاکستان شامل ہیں۔

بے لوثی اور عقیدت کی علامت ، ڈاکٹر پفاؤ کا 10 اگست ، 2017 کو ، 87 سال کی عمر میں کراچی کے ایک اسپتال میں انتقال ہوگیا۔ انہیں پورے قومی اعزاز کے ساتھ ریاست کا جنازہ دیا گیا اور انہیں میٹروپولیس میں سپرد خاک کردیا گیا۔

The third anniversary of Dr. Ruth Pfau, the German doctor who devoted more than 55 years of her life to eradicating leprosy in Pakistan, was committed across the country on Monday.

Dr. Pfau was celebrated as Mother Teresa of Pakistan and was born in Leipzig, Germany, in 1929. As a medical student, she was sent to India by her order, the Daughters of the Heart of Mary, in 1960, but was stuck in Karachi because of visa problems. During this time she first became aware of leprosy.

Later in 1961, Dr. Peacock went to India to return to Pakistan, where she launched a campaign to curb leprosy, a highly contagious bacterial infection. She trained Pakistani doctors, attracted foreign donations and built leprosy clinics across the country, reporting all electronic channels.

Dr. Pfau joined the Marie Adelaide Leprosy Center (MALC) and soon turned it into the center of a network of 157 medical centers that treated tens of thousands of leprosy infected Pakistanis.

The World Health Organization (WHO) declared the disease, also known as Hansen’s disease, under control in Pakistan in 1996, much earlier than in other countries in Asia.
She was granted Pakistani citizenship in 1988 and has received numerous awards for her services, including Hilal-i-Imtiaz, the second highest civilian honor, Nishan-i-Quaid-i-Azam and Hilal-i-Pakistan.

Dr. A symbol of selflessness and devotion, peacock died on August 10, 2017 at the age of 87 in a Karachi hospital. She received a state funeral with full national honors and was buried in the metropolis.

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here

Most Popular

Nadeem Malik Live 23rd November 2020

Nadeem Malik Live live telecasted today at Samaa Tv can be watched here online with ease. Today's Nadeem Malik Live show topic...

Barri Baat with Adil Shahzeb 23rd November 2020

Barri Baat with Adil Shahzeb live telecasted today at HUM News can be watched here online with ease. Today's Barri Baat with...

Kal Tak 23rd November 2020

Kal Tak live telecasted today at Express News can be watched here online with ease. Today's Kal Tak show topic is Educational...

Capital Talk 23rd November 2020

Capital Talk live telecasted today at Geo News can be watched here online with ease. Today's Capital Talk show topic is Should...

Recent Comments