Home Pakistan Pakistan, China, Russia, and Iran Respect for Afghan-Led Peace Process

Pakistan, China, Russia, and Iran Respect for Afghan-Led Peace Process

4 nations in which Pakistan, China, Russia and Iran participated have reaffirmed their respect for the sovereignty, independence and territorial integrity of Afghanistan and the decision of the population about their future and development path.

After a virtual meeting of the four countries’ special representatives on Afghanistan, they welcomed the agreement between two key political leaders in a joint statement and hoped that this important event would speed up the start of the intra-Afghan negotiations.

The four-nation meeting supported the Afghan-led peace and reconciliation process, as integrative intra-Afghan negotiations are the only way to achieve Afghanistan’s national reconciliation, leading to an immediate end to the ongoing conflict.

The declaration showed the determination to support Afghanistan in order to achieve a comprehensive and sustainable peace at an early stage. It also called for the proper and responsible withdrawal of foreign troops so that the situation in Afghanistan changes constantly.

The four nations supported the release of prisoners and detainees from all parties to the conflict in Afghanistan and expressed the hope that UN Security Council Resolution 2513 (2020) could be upheld and implemented.

At the meeting, they also supported the UN Secretary General António Guterres‘ initiative for a universal ceasefire and called for a comprehensive ceasefire to be declared across Afghanistan.

پاکستان ، چین ، روس ، اور ایران افغان قیادت میں امن عمل کا احترام کرتے ہیں

چار ممالک کے اجلاس ، جس پر پاکستان ، چین ، روس ، اور ایران شامل ہیں ، نے افغانستان کی خودمختاری ، آزادی اور علاقائی سالمیت اور اپنے عوام کے مستقبل اور ترقی کے راستے پر اپنے احترام کو بحال کیا ہے۔

افغانستان کے امور سے متعلق 4 ممالک کے خصوصی نمائندوں کی مجازی میٹنگ کے بعد ، ایک مشترکہ بیان جاری کیا گیا جس میں انہوں نے دو اہم سیاسی رہنماؤں کے مابین معاہدے کا خیرمقدم کیا اور امید ظاہر کی ہے کہ یہ اہم واقعہ انٹرا افغان مذاکرات کے آغاز میں تیزی لائے گا۔

چاروں ممالک کے اجلاس نے “افغان زیرقیادت ، افغان ملکیت” امن اور مفاہمت کے عمل کی حمایت کی کیونکہ داخلی – افغان مذاکرات ہی افغان قومی مفاہمت کا ادراک کرنے کا واحد راستہ ہے جس کی وجہ سے طویل تنازعہ کا فوری خاتمہ ہوتا ہے۔

بیان میں ابتدائی تاریخ میں جامع اور پائیدار امن کے حصول کے لئے افغانستان کی حمایت کرنے کے عزم کو ظاہر کیا گیا ، اس نے غیر ملکی فوجیوں کو منظم اور ذمہ دارانہ انداز میں انخلا کا مطالبہ بھی کیا تاکہ افغانستان کی صورتحال مستقل منتقلی کا سامنا کرے۔

اس میٹنگ میں انہوں نے عالمگیر جنگ بندی کے لئے اقوام متحدہ کے سکریٹری جنرل انتونیو گٹیرس کے اقدام کی بھی حمایت کی اور ایک ساتھ پورے افغانستان میں جنگ بندی کے اعلان کا مطالبہ کیا۔

Moazzam Sultan
He is very good author and love to cover new stories from every field.

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here

Most Popular

Travel to Karachi? This Map Helps You To Mark

کراچی کا سفر؟ یہ نقشہ آپ کو نشان زد کرنے میں مدد کرتا ہے آپ کے شہر...

Prime Minister’s Visit To Muzaffarabad on The Occasion of Solidarity Day Siege

وزیر اعظم کا یوم یکجہتی محاصرے کے موقع پر مظفر آباد کا دورہ کشمیری محاصرے کا...

India learned to change Kashmir’s demographic status from Israel: President Arif Alvi

بھارت نے اسرائیل سے کشمیر کی آبادیاتی حیثیت کو تبدیل کرنا سیکھا: صدر عارف علوی صدر ڈاکٹر...

Pakistan will continue to expose the true face of India: Mahmood Qureshi

پاکستان بھارت کا اصل چہرہ بے نقاب کرتا رہے گا: محمود قریشی وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی...

Recent Comments